حرز حضرت امام زین العابدین علیہ السلام

حرز حضرت امام زین العابدین علیہ السلام

ابن طاؤس نے مہج الدعوات میں دومقامات پر یہ حرز امام زین العابدین(ع)سے نقل کیا ہے :

بِسْمِ اللهِ الرَّحْمنِ الرَّحِیمِ یَا أَسْمَعَ السَّامِعِینَ، یَا أَبْصَرَ النَّاظِرِینَ، یَا أَسْرَعَ الْحاسِبِینَ، یَا أَحْکَمَ

شروع خدا کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے اے سننے والوں سے زیادہ سننے والے اے دیکھنے والوں سے زیادہ دیکھنے والے اے حساب کرنے

الْحاکِمِینَ، یَا خالِقَ الْمَخْلُوقِینَ، یَا رازِقَ الْمَرْزُوقِینَ، یَا ناصِرَ الْمَنْصُورِینَ، یَا أَرْحَمَ الرَّاحِمِینَ،

والوں میں تیز تر اے سب سے بڑے حاکم اے خلق شدہ چیزوں کے خالق اے رزق پانے والوں کے رازق اے مدد یافتہ لوگوں کے مددگار اے سب سے

یَا دَلِیلَ الْمُتَحَیِّرِینَ، یَا غِیاثَ الْمُسْتَغِیثِینَ، أَغِثْنِی یَا مالِکَ یَوْمِ الدِّینِ، إِیَّاکَ نَعْبُدُ وَ إِیَّاکَ

بڑھ کر رحم کرنے والے اے پریشان لوگوں کے رہنما اے فریادیوں کے فریاد رس میری فریاد رسی کر اے یوم جزا و سزا کے مالک ہم تیری ہی عبادت کرتے

نَسْتَعِینُ، یَا صَرِیخَ الْمَکْرُوبِینَ، یَا مُجِیبَ دَعْوَةِ الْمُضْطَرِّینَ أَنْتَ اللهُ رَبُّ الْعالَمِینَ أَنْتَ اللهُ

ہیں اور تجھی سے مدد مانگتے ہیں اے دکھیاروں کے فریاد رس اے دعا قبول کرنے والے تو ہی وہ الله ہے جو عالمین کا پروردگار ہے

لاَ إِلہَ إِلاَّ أَ نْتَ الْمَلِکُ الْحَقُّ الْمُبِینُ، الْکِبْرِیاءُ رِداؤُکَ اَللّٰھُمَّ صَلِّ عَلی مُحَمَّدٍ الْمُصْطَفی

تو ہی وہ الله ہے کہ تیرے سوا کوئی معبود نہیں تو سچا اور حقیقی حکمران ہے کہ بڑائی تیرا لباس ہے اے معبود محمد مصطفٰی پر رحمت نازل فرما

وَعَلی عَلِیٍّ الْمُرْتَضی وَفاطِمَةَ الزَّھْراءِ، وَخَدِیجَةَ الْکُبْری، وَالْحَسَنِ الْمُجْتَبی، وَالْحُسَیْنِ

اور علی(ع) مرتضی(ع) پر رحمت نازل فرما اور فاطمہ زہرا(ع) اور خدیجة(ع) الکبریٰ پر رحمت نازل فرما اور حسن(ع) مجتبٰی

الشَّھِیدِ بِکَرْبَلاءَ،وَعَلِیِّ بْنِ الْحُسَیْنِ زَیْنِ الْعابِدِینَ وَمُحَمَّدِ بْنِ عَلِیٍّ الْباقِرِ وَجَعْفَرِ بْنِ مُحَمَّدٍ

پر رحمت نازل فرما اور اس حسین(ع) پر رحمت نازل فرما جو کربلا میں شہید ہوئے اور علی(ع) ابن حسین(ع) زین العابدین(ع) اور محمد باقر(ع) پر رحمت نازل فرما

الصَّادِقِ وَمُوسَی بْنِ جَعْفَرٍ الْکَاظِمِ، وَعَلِیِّ بْنِ مُوسَی الرِّضا، وَمُحَمَّدِ بْنِ عَلِیٍّ التَّقِیِّ، وَعَلِیِّ

اور جعفر صادق(ع) اور موسی کاظم(ع) پر رحمت نازل فرما اور علی رضا(ع) اور محمد تقی(ع) پر رحمت نازل فرما اور علی نقی(ع)

بْنِ مُحَمَّدٍ النَّقِیِّ وَالْحَسَنِ الْعَسْکَرِیِّ وَالْحُجَّةِ الْقائِمِ الْمَھْدِیِّ الْاِمامِ المُنْتَظَرِ صَلَواتُ اللهِ

اور حسن عسکری(ع) پر رحمت نازل فرما اور حجة القائم(ع) امام مہدی(ع) پر رحمت نازل فرما خدا کی رحمتیں ہوں ان سب پر

عَلَیْھِمْ أَجْمَعِینَ۔اَللّٰھُمَّ والِ مَنْ وَالاھُمْ، وَعادِ مَنْ عادَاھُمْ، وَانْصُرْ مَنْ نَصَرَھُمْ، وَاخْذُلْ مَنْ

اے معبود دوست رکھ اسے جو انہیں دوست رکھے اور دشمنی رکھ اس سے جو ان سے دشمنی رکھے اور مدد کر اس کی جو ان کی مدد کرے اور چھوڑ دے ان کو اور

خَذَلَھُمْ،وَالْعَنْ مَنْ ظَلَمَھُمْ،وَعَجِّلْ فَرَجَ آلِ مُحَمَّدٍ وَانْصُرْ شِیعَةَ آلِ مُحَمَّدٍ،وَارْزُقْنِی رُؤْیَةَ

لعنت کر ان پر جو ظلم کرے ور آل(ع) محمد(ع) کو کشادگی دینے میں جلدی کر اور آل(ع) محمد(ع) کے شیعوں کی مدد فرما اور مجھے قائم آل(ع) محمد(ع) کا دیدار نصیب فرما اور مجھ کو ان

قائِمِ آلِ مُحَمَّدٍ، وَاجْعَلْنِی مِنْ أَتْباعِہِ وَأَشْیاعِہِ وَالرَّاضِینَ بِفِعْلِہِ، بِرَحْمَتِکَ یَا أَرْحَمَ الرَّاحِمِینَ۔

کے پیروکاروں اوران کے مددگاروں اور ان کے کام سے خوش ہونے والوں میں قرار دے اپنی رحمت سے اے سب سے زیادہ رحم کرنے ولے۔